93

باپ ، باپ ہوتا ہے

ایک بار ایک آدمی اپنے بیٹے سے ملنے کالج جاتا ہے۔ وہاں اس کے بیٹے اور ایک خوبصورت لڑکی اکھٹے ہوسٹل میں رہتے ہیں۔آدمی اپنے بیٹے سے
آدمی : –تمہارے ساتھ یہ لڑکی کون ہے؟

بیٹا : – ڈیڈی، یہ میری روم میٹ ہے، اور ہم اکھٹے رہتے ہیں۔ ہمارے درمیان کوئی ریلیشن نہیں ہے اور ہمارے رومز بھی الگ الگ ہیں،۔ ہم لوگ صرف اچھے دوست ہیں
ٹھیک ہے بیٹا یہ کہ کر اس کے ڈیڈی چلے گئے

تین بعد لڑکی لڑکے سے : – سنو، گزشتہ دنوں تمہارے ڈیڈی نے جس پلیٹ میں کھانا کھایا کیا تھا، وہ پلیٹ گم ہوگئی ہے۔ مجھے شک ہے کہ تمہارے ڈیڈی نے چوری کی ہے .. !! لڑکا : – بکواس بند کرو ! یہ کیا کہہ رہی ہو تم؟

لڑکی : – آپ ایک بار اپنے ڈیڈی سے پوچھو تو سہی؟

لڑکا : – اچھا ٹھیک ہے … !!اور اپنے ڈیڈی کو فون کرتا ہے : ڈیر پاپا!! میں یہ بھی نہیں کہہ رہا ہوں کہ آپ نے چوری کی …… اگر آپ غلطی سے پلیٹ بیگ میں آ گئی ہو تو آپ

پلیز اسے واپس کردیں ۔ ، کیونکہ وہ پلیٹ اس لڑکی کی ہے

اس کے ڈیڈی اسے جواب دیتے ہیں: بیٹا! اگر ان دنوں میں وہ لڑکی ایک بار بھی اپنے روم سوتی تو چادر کے نیچے اسے پلیٹ مل جاتی جو میں نے وہاں چھپائی تھی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں