30

سائنسدانوں نے رونگٹے کھڑے ہونے کی وجہ معلوم کر لی

اکثر فلم کے سین کو دیکھتے ہوئے رونگٹے کھڑے ہوجاتے ہیں؟

مگر ایسا کیوں ہوتا ہے؟

ہارورڈ یونیورسٹی کے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ سیلر کی جو اقسام رونگٹے کھڑے ہونے کا باعث بنتی ہیں وہ بالوں کی جڑوں اور بالوں کے اسٹیم سیلز کو ریگولیٹ کرنے میں بھی اہم کردار ادا کرتی ہیں۔

جلد کے اندر جو مسلز رونگٹے کھڑے ہونے کا باعث بنتے ہیں وہ بالوں کی جڑوں کے اسٹیم سیلز سے اعصابی رابطے میں پل کے لیے ضروری ہیں۔

یہ اعصاب سردی میں پٹھوں کی کشیدگی کا جواب دیتے ہیں اور بالوں کی جڑوں کے ساتھ ساتھ دیرپا بنیادوں پر نئے بالوں کی نشوونما کو متحرک کرتے ہوئے تھوڑی دیر کے لئے بالوں کا خاتمہ کرتے ہیں۔

جریدے سیل میں شائع ہونے والے چوہوں پر تجربات میں ، محققین نے سیل کے مختلف اقسام اور اسٹیم سیل کے مابین تعلقات کے بارے میں اور خارجی ماحول سے ان میں تبدیلیاں لانے کے بارے میں مزید معلومات حاصل کیں۔

انہوں نے کہا ، ‘ہم ہمیشہ بیرونی محرکات کے تئیں خلیہ خلیوں کے رویوں کو سمجھنے میں دلچسپی رکھتے ہیں۔ جلد کا اپنا منحوس نظام ہے ، جس میں متعدد اسٹیم سیل مختلف قسم کے خلیوں کی حوصلہ افزائی کرتے ہیں۔’ بیرونی دنیا کے مابین رابطے کی قیادت کریں۔

انہوں نے کہا ، ‘اس مطالعے میں ، ہم نے سیکھا کہ اسٹیم سیلز کا دوہری نظام کس طرح کام کرتا ہے ، جو نہ صرف مستحکم خلیوں کو باقاعدہ بناتا ہے ، بلکہ اسٹیم سیل کے طرز عمل کو بیرونی درجہ حرارت سے بھی تبدیل کرتا ہے۔’

متعدد اعضاء 3 قسم کے ؤتکوں پر مشتمل ہوتے ہیں ، اور جلد میں یہ تینوں ہی ایک خاص اہتمام کے تحت منظم ہوتے ہیں ، جس میں ہمدرد اعصاب بھی شامل ہیں ، جو اعصابی نظام کا حصہ ہیں جو جسم کے بیرونی ردعمل کو کنٹرول کرتے ہیں۔ جڑے ہوئے ہیں۔

یہ فائلیں بال پٹک سے منسلک اسٹیم سیلوں سے منسلک ہوتی ہیں ، جو بالوں کی نشوونما کے لئے اہم ہیں۔

اس سے بالوں کے پٹکنے کھڑے ہونے کا بھی سبب بنتا ہے ، جو اعصابی سگنل کے طور پر جسم میں سردی کی لہر بھیجتا ہے ، جس کی فائل پر رد عمل ہوتا ہے ، کھینچا ہوا محسوس ہوتا ہے اور چھوٹے بالوں کو اختتام پر کھڑا کرتا ہے۔

الیکٹران مائکروسکوپ سے جلد کی جانچ کرتے ہوئے ، محققین نے دریافت کیا کہ یہ اعصاب نہ صرف پٹھوں سے بلکہ بال بال کے پتے کے خلیہ خلیوں سے بھی براہ راست جڑے ہوئے ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں